- Advertisement -

Har Shai hai Par Malal

An Urdu Ghazal By Saghar Saddiqui

ساغر صدیقی
انتظارِ نظر

ہر شے ہے پر ملال بڑی تیز دھوپ ہے

ہر لب پہ ہے سوال بڑی تیز دھوپ ہے

چکرا کے گر نہ جاؤں میں اس تیز دھوپ میں

مجھ کو ذرا سنبھال بڑی تیز دھوپ ہے

دے حکم بادلوں کو خیاباں نشیں ہوں میں

جام و سبو اچھال بڑی تیز دھوپ ہے

ممکن ہے ابر رحمت یزداں برس پڑے

زلفوں کی چھاؤں ڈال بڑی تیز دھوپ ہے

اب شہر آرزو میں وہ رعنائیاں کہاں

ہیں گل گدے نڈھال بڑی تیز دھوپ ہے

سمجھی ہے جسے سایہء امید عقل خام!

ساغر کا ہے خیال بڑی تیز دھوپ ہے

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

سلام اردو سے منتخب سلام
An Urdu nazam by Faisal Ajmi