A True Salam To Urdu Literature

Badi Mushkil Se Uth Kar

An Urdu Ghazal By Ayub Sabir

بڑی مشکل سے اُٹھ کر جا رہا ہوں
میں بھاری دل سے اُٹھ کر جا رہا ہوں

ترے لہجے کا سارا زہر پی کر
تری محفل سے اُٹھ کر جا رہا ہوں

یہاں تو موت کے پہرے لگے ہیں
یدِ قاتل سے اُٹھ کر جا رہا ہوں

جو اپنے عدل کو بھی بیچ ڈالے
اُسی عادل سے اُٹھ کر جا رہا ہوں

سمندر نے کنارے پر ہے پھینکا
ابھی ساحل سے اُٹھ کر جا رہا ہوں

رکا تو ہمنوا سمجھیں گے مجھ کو
درِ باطل سے اُٹھ کر جا رہا ہوں

جہاں صابرؔ کو تم نے قید رکھا
اُسی محمِل سے اُٹھ کر جا رہا ہوں

Leave A Reply

Your email address will not be published.

Recommended Salam
An Urdu Ghazal By Ayub Sabir