آپ کا سلاماردو غزلیاتاقرا جبینشعر و شاعری

شعلہ بن کے جلتا سورج

اقرا جبین کی ایک اردو غزل

شعلہ بن کے جلتا سورج
جیسے ہو اک خطرہ سورج

لازم کب تھادیکھنا چاند
میرے سامنے آیا سورج

حاصل چاہے کچھ نا ہو
روشن کرتا چلتا سورج

لگتا ہے تم سے ملتا ہے
میٹھےسپنے بنتا سورج

اپنی راہ پہ چلتا جائے
اپنی راہ پہ چلتا سورج

اقرا جبین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

متعلقہ اشاعتیں

سلام اردو سے ​​مزید
Close
Back to top button