- Advertisement -

ماں

شازیہ اکبر کی اردو نطم

ماں

ماں مرے پیار کا پہلا عنوان ہے
ماں مری زندگی ہے مری جان ہے
ماں کی آنکھیں سمندر کوئی بیکراں
ماں ہی دھرتی مری اور مرا آسماں
ماں کی خوشبو سے جیون مہکتا رہے
کچھ رہے نہ رہے ماں تُو زندہ رہے
ماں ! تیرے حوصلوں کو سلامِ وفا
تجھ سے تعبیر ہے پھر وجودِ خدا
تیرا پیکر حسیں ،دل نشیں روشنی
تو مرے سارے رازوں کی واقف بنی
تیری آنکھوں کے روشن ستارے رہیں
منزلیں اور کنارے ہمارے رہیں
ایک تیری دعا سے ملے ہر خوشی
ایک تیری رضا ہی مری بندگی

شازیہ اکبر

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

سلام اردو سے منتخب سلام
شازیہ اکبر کی اردو نطم