آپ کا سلاماردو غزلیاتحافظؔ زین العٰابدینشعر و شاعری

کب سے مِلا رہے ہیں نگاہیں جناب سے

حافظؔ زین العٰابدین کی ایک اردو غزل

کب سے مِلا رہے ہیں نگاہیں جناب سے
فرصت کہاں ہے آپ کو اپنے شباب سے

روزِ جزا بھی ہم نے اُٹھانا ہے بارِ زیست
کیوں کر ہوں لا جواب تمہارے حساب سے

پھر اس کے بعد کیا ہوا اس کی خبر نہیں
اس نے ہٹائے ہاتھ جو اپنے نقاب سے

پھرتا تھا کل رقیب ترے گھر کے آس پاس
اٹھتے ہیں سو سوال ترے اک جواب سے

ہم نے بھلا دیا تھا کوئ راز آپ کا
اِک پھول سا مِلا ہے حوالہ کتاب سے

 

حافظؔ زین العٰابدین

حافظ زین العابدین

حافظؔ زین العٰابدین ۔ جائے پیدائش ۔ قصور، پنجاب نو سال کی عمر میں حفظِ قرآن کرنے کے بعد اپنی دنیاوی تعلیم کا آغاز کیا ۔ پنجاب کالج قصور سے انٹر کے بعد اب فیملی بزنس سنبھال رہا ہوں۔۔۔ شاعری کا آغاز آٹھ برس قبل کیا ۔۔۔ پہلا شعری مجموعہ اشاعت کے مراحل میں ہے

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

متعلقہ اشاعتیں

Back to top button