آپ کا سلاماردو غزلیاتشعر و شاعریطلعت سروہا

جو سر پہ میرے دوپٹہ دکھائی دیتا ہے

ایک اردو غزل از طلعت سروہا

جو سر پہ میرے دوپٹہ دکھائی دیتا ہے

نشان میری حیا کا دکھائی دیتا ہے

وہ ایک شخص جو مجھ کو لبھا رہا ہے بہت

کچھ اور اسکا ارادہ دکھائی دیتا ہے

مرے مزاج سے ملتا نہیں مزاج تیرا

اگرچہ سب کو تو میرا دیکھائی دیتا ہے

جو مجھکو شہر میں بدنام کرنے والا تھا

تمام شہر میں رسوا دیکھائی دیتا ہے

فریب اتنے دئیے مجھ کو زندگی نے طلعت

حقیقتوں میں ڑھل بھی سپنا دیکھائی دیتا ہے

طلعت سروہا

طلعت سروہا

نام ۔ طلعت جہاں سروہا قلمی نام۔ طلعت سروہا افسانہ نگار، شاعرہ پیدائش۔ سہارنپور(یو پی ) تعلیم ۔ MA پہلی غزل خاتون مشرق میں شائع ہوئی تھی اور بشتر اخبارات میں بھی شائع ہوتی رہتی ہیں ۔ شاعری مجموعہ بہت جلد منظر عام پر آئے گا۔ زبان۔ اردو، ہندی، انگریزی

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

متعلقہ اشاعتیں

Back to top button