A True Salam To Urdu Literature

Gardish Ke Intekhaab Ki

A Ghazal By Malik Ateeq

گردش کے انتخاب کی حالت میں مرگیا
گرداب اضطراب کی حالت میں مرگیا

سورج کی خودکشی نے نظارے بجھا دیے
اور آسماں سراب کی حالت میں مرگیا

اس خوابناک شہر میں دیکھا کسی نے کب
اک شخص ماہ تاب کی حالت میں مر گیا

جو راستہ تمہاری محبت کا فیض تھا
اک روز وہ شباب کی حالت میں مر گیا

پھر ڈھونڈتی رہی اسے تعبیر کوبکو
جو ایک خواب خواب کی حالت میں مر گیا

خوشبو کے ساتھ میری نہیں بن سکی عتیق
میں باغ میں عتاب کی حالت میں مرگیا

Leave A Reply

Your email address will not be published.

Recommended Salam
A Ghazal By Malik Ateeq